ہوم / 2018 / جنوری

Monthly Archives: جنوری 2018

نظم ۔۔۔۔۔۔از سعدیہ تسنیم سحر، جرمنی

 نظم از سعدیہ تسنیم سحر، جرمنی سمے کابوڑھا تنہا برگد سوچ میں گم خاموش کھڑا ہے اسکی بوڑھی بوجھل شاخیں گئی رتوں کا نوحہ بن کر آپس میں کچھ الجھ گئی ہیں ماضی کے یخ بستہ گھر میں یادوں کا دوشالہ اوڑھے دھیرے دھیرےکانپ رہی ہیں تھکی تھکی سی ہانپ

مزید پڑھیے

قارئین اور ہمارا اظہار تشکر۔۔۔۔۔ایڈیٹر، ایڈمن آئینہ ابصار

دنیا بھر کے کشادہ ظرف اور وسیع النظر ، اہل علم و فن کو آئینہ ابصار کی اشاعت مبارک ہو۔ اسی طرح ہمارے ایک لاکھ سے زائد دنیا کے چھیاسی ممالک میں پھیلے ہوئے اور کئی زبانیں بولنے اور سمجھنے والے قارئین بھی ہمارے ہدیئہ تبریک کے ساتھ ساتھ جذبہ

مزید پڑھیے

غزل۔۔۔۔۔۔۔چوہدری محمد علی مضطر عارفی

غزل اگر آتا نہ ہو انکار پڑھنا کبھی اس عہد کے اخبار پڑھنا تم اپنا جھوٹ خود پڑھ کے سنا دو ہمیں آتا نہیں سرکار پڑھنا وفا کے جرم میں اہل وفا کو کبھی باغی کبھی غدار پڑھنا خدائی کا اگر دعوی کیا ہے دلوں کو بھی بت عیار پڑھنا

مزید پڑھیے

نظم۔۔۔۔۔۔۔نیلم رباب، لندن

دسمبر دسمبر کی دھندلی سلگتی سی شامیں یہ سپنوں سے معمور یادوں کا موسم یہ پل میں اجالا یہ پل میں اندھیرا یہ سرمئی کرنوں کا ہر سو بسیرا یہ جلتی سی راتیں یہ تپتا سا دل ہے افق در افق چاندنی چھا رہی ہے کہ خوشبو ہوا میں گھلی

مزید پڑھیے

کماد، سور اور بیانیہ۔۔۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

ایک چھوٹے زمیندار کا پانچ ایکڑ کماد تھا جس میں سور گھس گئے۔ اس نے کوک فریاد کی تو بستی اور ارد گرد کے ڈیروں سے کوئی سو ڈیڑھ سو لٹھ بردار، آٹھ دس بندوقچی ، پچیس تیس کتے اور تماش بین لونڈوں لپاڑیوں کا ایک غول اکٹھا ہوا اور

مزید پڑھیے

عمران خانی تصوف اور پاکستانی ختم نبوت۔۔۔۔۔از چوہدری اصغر علی بھٹی

جاوید چوہدری عمران خاں ،ابن عربیؒ اور پاکستانی ختم نبوت ہمارے ملک کے معروف کالم نگار جناب جاوید چوہدری صاحب اپنے حالیہ کالم’’ لخ دی۔۔۔ہم سب پر ‘‘ میں قوم کو خوشخبری دیتے ہوئے فرماتے ہیں کہ میں بیس برس سے مولانا روم ؒاور ابن عربی ؒ کا پیچھا کر

مزید پڑھیے

ریڈیو پاکستان کے ممتاز میلسی۔۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

ایک بینڈ کے چھوٹے ریڈیو کی ہمارے لڑکپن میں وہی حیثیت تھی جو آج سمارٹ فون کی ہے اور ہمیں یہ عیاشی نصیب تھی۔ چھت پہ سوتے میں رات گئے ممتاز میلسی بطور کمپئیر اپنے پروگرام کے ساتھ حاضر ہوتے اور ہم گویا ریڈیو پاکستان کے اسی سبزہ زار میں

مزید پڑھیے

ایک بہت پرانی غزل۔۔۔۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

سن 1991 کی ایک غزل نذر قارئین آئینہ ابصار ربط جب ٹوٹ چکا ہے تو صدائیں کیسی اب جو ملنا ہی نہیں ہے تو وفائیں کیسی چند یادیں ہیں کچھ آنسو ہیں یہ واپس لے لو گر نہیں جرم کوئ ، تو یہ سزائیں کیسی مستقل ایک اداسی میں تو

مزید پڑھیے

نظم۔۔۔۔۔۔۔۔از نیلم رباب، لندن

مقابلہ لازم مجاہدے ہیں سبھی ناصرات کو لجنہ کو یعنی دین کی طالب بنات کو اپنا مقابلہ ہے زمانے کی سوچ سے سوچوں کے اختلاف سے طرز پکار سے کوئی کہے گا کیا، ہمیں یہ سوچنا نہیں کرنا ہے واجب العمل حسن وقار کو دل کا معاملہ بھی یہی تو

مزید پڑھیے

Send this to friend