ہوم / کلچر/فنون لطیفہ (page 3)

کلچر/فنون لطیفہ

پنجابی زبان کااداس شاعر،۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ شو کمار بٹالوی

بھارت میں جس پنجابی شاعر نے سب سے زیادہ مقبولیت حاصل کی ، وہ تھے شِو کمار بٹالوی ۔۔۔۔ پنجاب میں تو وہ شاید ساحر، امرتا، فراز سے بھی زیادہ مقبول ہوئے۔ یوں سمجھیں ان کی نظمیں لوک گیت بن گئیں۔ نی اک میری اکھہ کاشنی + دوجےرات دے آنیندرے

مزید پڑھیے

غزل۔۔۔۔۔۔۔، طاہر احمد بھٹی

غزل قافیوں کا کفن نہیں ہوتی شاعری محض فن نہیں ہوتی بر سر دار گفتگو کرنا۔۔۔ صرف مشق سخن نہیں ہوتی تشنگی ،ہو جو حاشیوں پہ لکھی پیاس کا۔۔۔۔۔۔وہ متن نہیں ہوتی کشمکش دیدنی ہے دونوں کی دلبری۔۔۔۔دل شکن نہیں ہوتی اتفاقا”…..نہیں نمود حیات زندگی۔۔۔۔۔۔دفعتہ” نہیں ہوتی (طاہر احمد بھٹی۔

مزید پڑھیے

Pencil Work ………….by Manahil Ahmad

We welcome and appereciate the pencil work in School by Manahil Ahmad who is a 10th Grader in Insel – Werkrealschule Pforzheim , Germany. This homework is inculcating the constructive instinct and organised behaviour in school going kids to take up the real life responsibilities with smooth lines as they

مزید پڑھیے

نظم۔۔۔۔۔۔۔۔۔شہامت سلطان

ہماری جان کے نام ۔۔۔ دل کے ہر گوشہِ عقیدت میں ہیں ترازو ہزار ہا نیزے ان میں کچھ بچپنے کا ماحاصل کچھ میری سادگی کے تحفے ہیں کچھ میرے دوستوں کی خیراتیں کچھ غنیموں کی وارداتیں ہیں سب میرے محسنوں کے قصے ہیں جن کے نیرنگ سے کارہائے حیات

مزید پڑھیے

غزل۔۔۔۔۔۔۔۔۔ارشاد عرشی ملک

جو ملک نام پہ اسلام کے بنا اس میں ارشاد عرشیؔ ملک جو ملک نام پہ اسلام کے بنا اس میں سلامتی سے ہی محروم ہو گئے ہیں لوگ یہاں پہ شام و سحر کربلا کا موسم ہے ہیں ماتمی سی فضائیں دلوں میں گہرا سوگ سمٹ کے رہ گیا

مزید پڑھیے

پنجابی غزل۔۔۔۔۔۔۔از قلم، طاہرہ سراء

جے مرضی اے تیری بس لے فیر تیری میری۔۔۔بس ڈبن دے لئی کافی اے اکھ دی گھمن گھیری بس پیار تے سب نوں ہندا اے ہوندی نئیں۔۔۔۔دلیری بس اوہ تے میرا ہویا سی میں وی ہوئی بتھیری بس طاہرا۔۔۔۔ رت گلاباں دی اوہ سی اک ہنیری۔۔۔۔بس (طاہرہ سراء)

مزید پڑھیے

گھر کا نقشہ بدل گیا ہے بہت۔۔۔غزل، چوہدری محمد علی مضطر عارفی

غزل حادثہ یوں تو ٹل گیا ہے بہت گھر کا نقشہ بدل گیا ہے بہت اپنے اندر سے جل گیا ہے بہت آگ بھی وہ نگل گیا ہے بہت کچھ تو ماحول بھی تھا آلودہ زہر بھی وہ اگل گیا ہے بہت اس کو پی لیجئے تسلی سے اب یہ

مزید پڑھیے

نا معلوم افراد۔۔۔۔۔۔۔عقیل عباس جعفری

پہلے شہر کو آگ لگائیں نامعلوم افراد اور پھر امن کے نغمے گائیں نامعلوم افراد لگتا ہے انسان نہیں ہیں کوئی چھلاوا ہیں سب دیکھیں پر نظر نہ آئیں نامعلوم افراد ہم سب ایسے شہر ناپرساں کے باسی ہیں جس کا نظم ونسق چلائیں نامعلوم افراد لگتا ہے کہ شہر

مزید پڑھیے

Send this to friend