ہوم / پنجابی پیج / پنجابی غزل،۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ایوب کموکا

پنجابی غزل،۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ایوب کموکا

کیہ یار اساڈا جیونا اسیں کچی برف دے بھور
سانوں چھمکاں سورج ماردا سانوں کردی رات ٹکور

کل پی کے ساہ تریل دے ہوئی الہڑ دھپ جوان
اج واہ کے بودا چِیرواں کیوں پئے گئی میرے کھور

میں اکھ نوں جھُونے مار کے جد ڈھاہ لے پکے نِیر
ایہہ پہلا پھل سی ہجر دا سجناں ول دتا ٹور

میں یار پرانی بوسکی میری بھُگی ہک ہک تند
اس تکیا جدوں سنوار کےمیں ہوگئی نویں نکور

جئیں لُٹیا ڈیوے بال کے مینوں سجنو چِٹے دینہہ
اوہ ڈھاکے چڑھ کے رات دے اج مینوں آکھے چور

ایوب کموکا

Sponsers

مصنف admin

Check Also

خواب اس آنکھ میں بھریں کیسے۔۔۔۔!غزل۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

خواب اس آنکھ میں بھریں کیسے۔۔۔۔!غزل۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی دیپ کچھ تھے ، مگر جلے ہی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Send this to friend