ہوم / پنجابی پیج / پنجابی غزل۔۔۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

پنجابی غزل۔۔۔۔۔۔۔۔طاہر احمد بھٹی

لیکھاں کیتی، ماڑی کوئی نہیں
ویلے،بھاجی چاڑھی کوئی نہیں

اچن چیتی، اٹھ کے ٹر پئی۔۔۔!
کیتی چنگی ماڑی کوئی نہیں

اکھ نے دیوا بال کے رکھیا
ہنھیرے کولوں، ہاری کوئی نہیں

اوس وی بوہا ڈھویا نہیں سی
میں وی کندھ اساری کوئی نہیں

دن دا بھار وی پورا چکیا
رات وی سر تے چاڑھی کوئی نہیں

سکھ سنیہڑھے ربوں ای آئے

 دکھاں نال، وگاڑی کوئی نہیں

آس اچیچی جا کے پچھیا
ہور تے راج کماری، کوئی نہیں؟

(طاہر احمد بھٹی، ۸ مارچ ۲۰۱۸، فرینکفرٹ، جرمنی)

مصنف طاہر بھٹی

Check Also

غزل۔۔۔۔۔۔۔۔۔مرزا محمد افضل، کینیڈا

خواب در خواب ہراک سمت سیاحت کی ہے ​​​​نیند در نیند کئی نوع کی مسافت

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Send this to friend