Food for thought, by: Marya Irem

A matter between man and Allah, by Waseem Altaf

The inevitable medium, by Marya Irem

Whatsapp Groups……..by Waseem Altaf

Colosseum Turns Red ; by Waseem Altaf

Asma is dead…..long live Asma!….by Adnan Rehmat

From Sir Sayed To Iqbal, by ; Dr. Satyapal Anand

Women Lawer Forum seeking equality, Editorial

Loud Thinking…………Hamza Rao

Poem………by Khola Ahmad

Poem ……by Saira A. Nizami

Joota…….by Waseem Altaf

An Evening covered landscape, by Bushra Mehmood

Recent Posts

پنجابی غزل۔۔۔۔۔۔۔۔۔ایوب کموکا

ایویں تے نہیں سنگتاں پھُٹن لگ پیۤاں دل دے اندر غرضاں پھُٹن لگ پیۤاں سینے دیوچ سورج اگیا ہویا سی ساہواں وچوں کرناں پھُٹن لگ پیۤاں ہک دن اوہدے ویکھن کان دعا منگی تَلیاں وچوں اکھاں پھُٹن لگ پیۤاں خورے کنھے بی سُٹیا اے نفرت دا دھرتی وچوں جنگاں پھُٹن

مزید پڑھیے

غزل۔۔۔۔۔۔۔۔ از ، صائمہ امینہ شاہ

جدا ہوکر بہت رویا گیا ہے محبت میں سبھی کھویا گیا ہے میری آنکھیں بھی جیسے لے گیا وہ نہ آئی نیند ، ناں سویا گیا ہے نہیں ہے اب کوئی بھی داغ اس پر یہ دل اشکوں سے یوں دھویا گیا ہے بڑی زرخیز ہے یہ کشت الفت یہاں

مزید پڑھیے

چودہ اگست اور جاوید چوہدری کا آدھا سچ۔۔۔۔۔۔اصغر علی بھٹی

لندن میں تین مصروف ترین ہفتے گزارنے کے بعد کاسا بلانکا کے ٹرانزٹ ہال میں داخل ہوتے ہوئے کافی سستی سی چھا رہی تھی۔ سوچا اچھا ہے نائیجر کے صحرا میں داخل ہونے سے پہلے کچھ مراکش کے نیم ٹھنڈے ماحول میں سُستا لیا جائے۔سوادھر اُدھر نظر دوڑائی۔ پرسکون گوشہ

مزید پڑھیے

Send this to friend