Food for thought, by: Marya Irem

A matter between man and Allah, by Waseem Altaf

The inevitable medium, by Marya Irem

Whatsapp Groups……..by Waseem Altaf

Colosseum Turns Red ; by Waseem Altaf

Asma is dead…..long live Asma!….by Adnan Rehmat

From Sir Sayed To Iqbal, by ; Dr. Satyapal Anand

Women Lawer Forum seeking equality, Editorial

Loud Thinking…………Hamza Rao

Poem………by Khola Ahmad

Poem ……by Saira A. Nizami

Joota…….by Waseem Altaf

Recent Posts

ادبی نشست

کل 20 دسمبر 2015 بروز اتواربینزھائیم Benshiem جرمنی میں اردو ادب کے اہل ذوق نے ایک نشست کا اھتمام کیا جس میں مجھے ڈہن تازہ سے مکالمے کا موقع ملا۔ اس میں سنائی گئی نظموں میں سے ایک  نظم اور تصاویر قارئین تفصیل و اجمال کی نذر۔۔۔۔ ہمیں تم اب

مزید پڑھیے

ٰتعارف آئینہ ابصار

کشادہ ظرفی اور وسیع النظری کو آئینہ ابصار کی اشاعت مبارک ہو۔ کون اس گھر کی دیکھ بھال کرے روز اک چیز ٹوٹ جاتی ہے۔  اس روزمرہ شکست و ریخت اور ٹوٹنے بننے کی دھوپ چھاوں کے مستقل اظہار کے لئے یہ نیا پلیٹ فارم خیال تازہ کو خوشآمدید کہتا

مزید پڑھیے

سو سلسلے خیال کے، سو رنگ خواب کے

tahir-bhatti

مکرم مبشر زیدی صاحب کی تحریر پڑھنے کو ملی تو سو لفظوں کی کہانیاں حافظے میں تازہ ہوئیں اور وہیں سے یہ مصرعہ عنوان ہوا۔ انگریزی ناول دنیا پہ حکمرانی کر رہا ہے اور اس کی ایک کیفیاتی توجیہہ ایک دفعہ برادرم فیض علی نے اسلام آباد میں بیان کی

مزید پڑھیے

Send this to friend